تازہ ترین
کام جاری ہے...
Sunday, July 16, 2017

سبق نمبر ٢٢: ہر وہ چیز : فھم عربی کورس: سماء ،کعبہ ،عورت ،حدیقہ ،عرض ،فاحشہ ،تہلکہ ،قارعہ ،موبق ،صرح ،صعید ،دابۃ ،غیب ،سحت ،حصب اور شجر ان الفاظ کے متعلق ایک مفید قاعدہ :

July 16, 2017


سبق نمبر ٢٢:
ہر وہ چیز :
فھم عربی کورس:
سماء ،کعبہ ،عورت ،حدیقہ ،عرض ،فاحشہ ،تہلکہ ،قارعہ ،موبق ،صرح ،صعید ،دابۃ ،غیب ،سحت ،حصب اور شجر ان الفاظ کے متعلق ایک مفید قاعدہ :
مگر یاد رہے ،یہ دیگر معنی میں بھی استعمال ہوتے ہیں ۔

سمائ:۔۔۔۔۔۔
کلُّ ما عَلاک فأظلَّک فہو سماء
ہر وہ چیز جو تمہارے اوپر ہو کر سایہ کرے وہ سماء ہے ۔

کعبۃ:
کل بِناء َ مُرَبَّع فہوَ کَعْبَۃ
ہر مربع عمارت کو کعبہ کہتے ہیں ۔

عورت :
کلُّ ما یُسْتحیا من کَشْفِہِ منْ أعضاء ِ الإِنسانِ فہوَ عَوْرۃ.
انسانی اعضاء میں سے ہر وہ چیز جس کو ظاہر کرنے سے حیاء کی جاتی ہے ،وہ عورت ہے ۔

حدیقۃ:
کلُّ بُسْتانٍ علیہ حائطٌ فہو حَدیقۃ والجمع حَدَائق
ہر وہ باغ جس کے گرد دیوار ہو وہ حدیقہ ہے ،اس کی جمع حدائق ہے ۔

عرض:
کلُّ شیء ٍ منْ مَتَاعِ الدُّنْیا فہو عَرَض
متاع دنیا میں سے ہر چیز عرض ہے ۔

فاحشہ:
کلُّ أمْرٍ لا یکون مُوَافِقاً للحقِّ فہو فاحِشۃ
ہر وہ امرجو حق کے موافق نہ ہو ،وہ فاحشہ ہے ۔

تَہْلُکۃ:
کلُّ شیء ٍ تَصیرُ عاقِبتُہُ إلی الہلاکِ فہو تَہْلُکۃ
ہر وہ چیز جسکی عاقبت ہلاکت ہو ،وہ تہلکہ ہے ۔

قارِعَۃ:
کلُّ نازِلۃٍ شَدیدۃٍ بالإِنسانِ فہی قارِعَۃ
ہر وہ سخت مصیبت جو انسان پر آئے وہ قارعہ ہے ۔

مَوْبِق:
کلُّ حاجِزِ بَینَ الشَیْئینِ فَہو مَوْبِق
ہر وہ چیز جو دو چیزوں کے درمیان حاجز ہو ،موبق ہے ۔

َ صَرْحٌ:
کلُّ بِنَاء ٍ عال فہوَ صَرْحٌ
ہر بلند عمارت صرح ہے۔

صعید :
کلُّ أرض مُسْتَوِیَۃٍ فہی صَعید
ہر ارض مستویہ صعید ہے ۔

دابۃ :
کلُ شیء ٍ دَبّ علی وَجْہِ الأرْضِ فہو دَابَّۃٌ
ہر وہ چیز جو زمین پر رینگتی ،ہاتھوں یا پاؤں کے بل چلتی ہے وہ دابہ ہے ۔

غیب:
کلُّ ما غَابَ عن العُیونِ وکانَ مُحصَّلا فی القُلوبِ فہو غَیْب
ہر وہ چیز جوآنکھوں سے غائب ہو،اور محصّل فی القلوب ہو،غیب ہے ۔

َ سُحْت:
کلُّ حرام قَبیحِ الذِّکرِ یلزَمُ منہ الْعارُِ فہوَ سُحْت
ہر حرام قبیح الذکر جس سے عار لازم آئے وہ سحت ہے ۔

حَصَب:
کلُّ ما ہَیَجتَ بہِ النارَ إذا أوقَدْتَہا فہو حَصَب
ہر وہ چیز جس سے آپ آگ جلاتے وقت آگ کو بھڑکاتے ہیں وہ حصب ہے ۔

شَجَر:
کلُّ ما کانَ علی ساقٍ من نَباتِ الأرْضِ فہو شَجَرٌ
ہر وہ نبات ارض جو تنے پر ہو شجر ہے ۔

(فقہ اللغۃ و سر العربیۃ ،ابو منصور الثعالبی ،ملخصا)

نوٹ :
قرآن و حدیث میں کسی لفظ کی وضاحت وہی کی جائے گی ،جومعتبر تفاسیر و شروح حدیث میں ائمہ ثقات سے منقول ہے۔

طالب دعا :
احسان اللہ کیانی
١٦۔جولائی ۔٢٠١٧


0 تبصرے:

Post a Comment

اس کے متعلق آپکی کیا رائے ہے ۔۔؟؟
کمنٹ بوکس میں لکھ دیں ،تاکہ دیگر لوگ بھی اسے پڑھ سکیں

اردو میں تبصرہ پوسٹ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کر دیں۔


 
فوٹر کھولیں‌/بند کریں