تازہ ترین
کام جاری ہے...
Friday, June 23, 2017

These things are Makrooh e Teh-reemi in namaz

June 23, 2017

نماز میں یہ یہ مکروہ تحریمی ہے

کپڑے یا داڑھی یا بدن کے ساتھ کھیلنا
  کپڑا سمیٹنا، مثلاً سجدہ میں جاتے وقت آگے یا پيچھے سے اٹھا لینا
اگرچہ گرد سے بچانے کے ليے کیا ہو
اور اگر بلا وجہ ہو تو اور زیادہ مکروہ ہے
کپڑا لٹکانا
مثلاً
سر یا مونڈھے پر اس طرح ڈالنا کہ دونوں کنارے لٹکتے ہوں، یہ سب مکروہ تحریمی ہيں۔
(عامۂ کتب)

رومال یا شال  یا چادر کے کنارے دونوں مونڈھوں سے لٹکتے ہوں
یہ ممنوع و مکروہ تحریمی ہے
اور ایک کنارہ دوسرے مونڈھے پر ڈال دیا اور دوسرا لٹک رہا ہے تو حرج نہیں
اور اگر ایک ہی مونڈھے پر ڈالا اس طرح کہ ایک کنارہ پیٹھ پر لٹک رہا ہے دوسرا پیٹ پر، جیسے عموماً اس زمانہ میں مونڈھوں پر رومال رکھنے کا طریقہ ہے
تو یہ بھی مکروہ ہے۔
(درمختار، ردالمحتار)

کوئی آستین آدھی کلائی سے زیادہ چڑھی ہوئی، یا دامن سميٹے نماز پڑھنا بھی مکروہ تحریمی ہے، خواہ پیشتر سے چڑھی ہو یا نماز میں چڑھائی۔
(درمختار)

شدت کا پاخانہ پیشاب معلوم ہوتے وقت، یا غلبہ ریاح کے وقت نماز پڑھنا، مکروہ تحریمی ہے.
(درمختار)

نماز شروع کرنے سے پیشتر اگر ان چیزوں کا غلبہ ہو تو وقت میں وسعت ہوتے ہوئے شروع ہی ممنوع و گناہ ہے
قضائے حاجت مقدم ہے
اگرچہ
جماعت جاتی رہنے کا اندیشہ ہو
اور
اگر دیکھتا ہے کہ قضائے حاجت اور وضو کے بعد وقت جاتا رہے گا تو وقت کی رعایت مقدم ہے
نماز پڑھ لے
اور
اگر اثنائے نماز  میں یہ حالت پیدا ہو جائے اور وقت میں گنجائش ہو تو توڑ دینا واجب
اور
اگر اسی طرح پڑھ لی، تو گناہ گار ہوا۔
(ردالمحتار)

جوڑا باندھے ہوئے نماز پڑھنا مکروہ تحریمی
اور
نماز میں جوڑا باندھا، تو فاسد ہوگئی۔
(بہار شریعت)

کنکرياں ہٹانا مکروہ تحریمی ہے
مگر
جس وقت کہ پورے طور پر بروجہ سُنت سجدہ ادا نہ ہوتا ہو، تو ایک بار کی اجازت ہے
اور بچنا بہتر ہے
اور اگر بغیر ہٹائے واجب ادا نہ ہوتا ہو تو ہٹانا واجب ہے اگرچہ ایک بار سے زیادہ کی حاجت پڑے۔
(درمختار، ردالمحتار)

اُنگلیاں چٹکانا

انگلیوں کی قینچی باندھنا یعنی ایک ہاتھ کی انگلیاں دوسرے ہاتھ کی انگلیوں میں ڈالنا، مکروہ تحریمی ہے۔  (درمختار وغیرہ)

نماز کے ليے جاتے وقت اور نماز کے انتظار میں بھی یہ دونوں چیزیں مکروہ ہیں
اور اگر نہ نماز میں ہے، نہ توابع نماز میں تو کراہت نہیں، جب کہ کسی حاجت کے ليے ہوں۔
(درمختار وغیرہ)

کمر پر ہاتھ رکھنا مکروہ تحریمی ہے
نماز کے علاوہ بھی کمر پر ہاتھ رکھنا نہ چاہیے۔
(درمختار)

اِدھر اُدھر مونھ پھیر کر دیکھنا مکروہ تحریمی ہے، کل چہرہ پھر گیا ہو یا بعض
اور
اگر مونھ نہ پھیرے، صرف کنکھیوں سے اِدھر اُدھر بِلا حاجت دیکھے، تو کراہت تنزیہی ہے اور نادراً کسی غرض صحیح سے ہو تو اصلاً حرج نہیں
نگاہ آسمان کی طرف اٹھانا بھی مکروہ تحریمی ہے۔
(بہار شریعت)

مرد کا سجدہ میں کلائیوں کو بچھانا

کسی شخص کے مونھ کے سامنے نماز پڑھنا، مکروہ تحریمی ہے۔
یوہیں دوسرے شخص کو مصلّی کی طرف مونھ کرنا بھی ناجائز و گناہ ہے
یعنی اگر مصلّی کی جانب سے ہو تو کراہت مصلّی پر ہے، ورنہ اس پر۔
(درمختار)

کپڑے میں اس طرح لپٹ جانا کہ ہاتھ بھی باہر نہ ہو مکروہ تحریمی ہے
علاوہ نماز کے بھی بے ضرورت اس طرح کپڑے میں لپٹنا نہ چاہیے
اور
خطرہ کی جگہ سخت ممنوع ہے۔
(درمختار)
اعتجار یعنی پگڑی اس طرح باندھنا کہ بیچ سر پر نہ ہو مکروہ تحریمی ہے
نماز کے علاوہ بھی اس طرح عمامہ باندھنا مکروہ ہے۔

یوہیں ناک اور مونھ کو چُھپانا،  اور بے ضرورت کھنکار نکالنا، یہ سب مکروہ تحریمی ہیں۔
(درمختار، عالمگیری)

نماز میں بالقصد جماہی لینا مکروہ تحریمی ہے
اور خود آئے تو حرج نہیں
مگر
روکنا مستحب ہے
اور
اگر روکے سے نہ رُکے تو ہونٹ کو دانتوں سے دبائے اور اس پر بھی نہ رُکے تو داہنا یا بایاں ہاتھ مونھ پر رکھ دے یا آستین سے مونھ چھپالے
قیام میں دہنے ہاتھ سے ڈھانکے اور دوسرے موقع پر بائیں سے۔
(مراقی الفلاح)

جس کپڑے پر جاندار کی تصویر ہو، اسے پہن کر نماز پڑھنا، مکروہ تحریمی ہے۔
نماز کے علاوہ بھی ایسا کپڑا پہننا، ناجائز ہے۔

یوہیں مصلّی  کے سر پر یعنی چھت ميں ہو یا معلّق ہو، یا محل سجود  میں ہو
کہ اس پر سجدہ واقع ہو، تو نماز مکروہ تحریمی ہوگی
یوہیں مصلّی کے آگے، یا داہنے، یا بائیں تصویر کا ہونا، مکروہ تحریمی ہے
اور
پسِ پُشت  ہونا بھی مکروہ ہے، اگرچہ ان تینوں صورتوں سے کم
اور
ان چاروں صورتوں میں کراہت اس وقت ہے کہ تصویر آگے پیچھے دہنے بائیں معلق ہو، یا نصب ہو یا دیوار وغیرہ میں منقوش ہو، اگر فرش میں ہے اور اس پر سجدہ نہیں، تو کراہت نہیں۔
اگر تصویر غیر جاندار کی ہے، جیسے پہاڑ دریا وغیرہا کی، تو اس میں کچھ حرج نہیں۔
(عامۂ کتب)

اگر تصویر ذلت کی جگہ ہو، مثلاً جوتیاں اُتارنے کی جگہ يا اور کسی جگہ فرش پر کہ لوگ اسے روندتے ہوں يا تکیے پر کہ زانو وغیرہ کے نیچے رکھا جاتا ہو، تو ایسی تصویر مکان میں ہونے سے کراہت نہیں، نہ اس سے نماز میں کراہت آئے، جب کہ سجدہ اس پر نہ ہو۔
(درمختاروغیرہ)

طالب دعا:
احسان اللہ کیانی

0 تبصرے:

Post a Comment

اردو میں تبصرہ پوسٹ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کر دیں۔


Translate in your Language

LinkWithin

Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
 
فوٹر کھولیں‌/بند کریں