Namaz k wajibat kon kon sey hein

نماز کے واجبات:
نوٹ :ترک واجب سے سجدہ سھو لازم ہو جاتا ہے

(۱) تکبیر تحریمہ میں لفظ اﷲ اکبر ہونا۔
(۲ تا ۸) الحمد پڑھنا یعنی اسکی ساتوں آیتیں کہ ہر ایک آیت مستقل واجب ہے
ان میں ایک آیت بلکہ ایک لفظ کا ترک بھی ترک واجب ہے۔ (۹) سورت ملانا یعنی ایک چھوٹی سورت جيسے
اِنَّاۤ اَعْطَیۡنٰکَ الْکَوْثَرَ ؕ﴿۱﴾
یا تین چھوٹی آیتیں جیسے
ثُمَّ نَظَرَ ﴿ۙ۲۱﴾ ثُمَّ عَبَسَ وَ بَسَرَ ﴿ۙ۲۲﴾ ثُمَّ اَدْبَرَ وَ اسْتَکْبَرَ ﴿ۙ۲۳﴾

یا ایک یا دو آیتیں، تین چھوٹی کے برابر پڑھنا۔
(۱۰ و ۱۱) نماز فرض میں دو پہلی رکعتوں میں قراء ت واجب ہے۔
(۱۲ و ۱۳) الحمد اور اس کے ساتھ سورت ملانا فرض کی دو پہلی رکعتوں میں
اور نفل و وتر کی ہر رکعت میں واجب ہے۔
(۱۴) الحمد کا سورت سے پہلے ہونا۔
(۱۵) ہر رکعت میں سورت سے پہلے ایک ہی بار الحمد پڑھنا
(۱۶) الحمد و سورت کے درمیان کسی اجنبی کا فاصل نہ ہونا ،
آمین تابع الحمد ہے اور بسم اﷲ تابع سورت، یہ اجنبی نہیں۔ (۱۷) قراء ت کے بعد متصلاً رکوع کرنا۔
(۱۸) ایک سجدہ کے بعد دوسرا سجدہ ہونا کہ دونوں کے درمیان کوئی رکن فاصل نہ ہو۔
(۱۹) تعدیل ارکان یعنی رکوع و سجود و قومہ و جلسہ میں کم از کم ایک بار سبحان اﷲ کہنے کی قدر ٹھہرنا یوہیں
(۲۰) قومہ یعنی رکوع سے سیدھا کھڑا ہونا۔
(۲۱) جلسہ یعنی دو سجدوں کے درمیان سیدھا بیٹھنا۔
(۲۲) قعدۂ اولیٰ اگرچہ نماز نفل ہو اور
(۲۳) فرض و وتر و سنن رواتب میں قعدۂ اولیٰ میں تشہد پر کچھ نہ بڑھانا۔
(۲۴ و ۲۵) دونوں قعدوں میں پورا تشہد پڑھنا، یوہیں جتنے قعدے کرنے پڑیں سب میں پورا تشہد واجب ہے ایک لفظ بھی اگر چھوڑے گا، ترک واجب ہوگا اور
(۲۶ و ۲۷) لفظ اَلسَّلَامُ دو بار اور لفظ عَلَیْکُمْ
واجب نہیں اور
(۲۸) وتر میں دعائے قنوت پڑھنا اور
(۲۹) تکبیر قنوت اور
(۳۰ تا ۳۵) عیدین کی چھوؤں تکبیریں اور
(۳۶) عیدین میں دوسری رکعت کی تکبیر رکوع اور
(۳۷) اس تکبیر کے ليے لفظ اﷲ اکبر ہونا اور
(۳۸) ہر جہری نماز میں امام کو جہر  سے قراء ت کرنا اور (۳۹) غیر جہری میں آہستہ۔
(۴۰) ہر واجب و فرض کا اس کی جگہ پر ہونا
(۴۱) رکوع کا ہر رکعت میں ایک ہی بار ہونا۔
(۴۲) اور سجود کا دو ہی بار ہونا۔
(۴۳) دوسری سے پہلے قعدہ نہ کرنا اور
(۴۴) چار رکعت والی میں تیسری پر قعدہ نہ ہونا۔
(۴۵) آیت سجدہ پڑھی ہو تو سجدۂ تلاوت کرنا۔
(۴۶) سہو ہوا ہو تو سجدۂ سہو کرنا۔
(۴۷) دو فرض یا دو واجب یا واجب فرض کے درمیان تین تسبیح کی قدر وقفہ نہ ہونا۔
(۴۸) امام جب قراء ت کرے بلند آواز سے ہو خواہ آہستہ، اس وقت مقتدی کا چپ رہنا۔
(۴۹) سِوا قراء ت کے تمام واجبات میں امام کی متابعت کرنا۔

از
#احسان_اللہ کیانی