سر کے بال منڈوانا ،بڑھانا، مانگ نکالنا:

سر کے بال منڈوانا ،بڑھانا، مانگ نکالنا:
مرد کو اختیار ہے کہ سر کے بال منڈائے یا بڑھائے اور مانگ نکالے۔ 
(ردالمحتار)
حضور اقدس صلَّی اللہ تعالٰی علیہ وسلَّم سے دونوں چیزیں ثابت ہیں۔

اگرچہ منڈانا صرف احرام سے باہر ہونے کے وقت ثابت ہے۔ دیگر اوقات میں مونڈانا ثابت نہیں۔
(جمع الوسائل في شرح الشمائل)

ہاں بعض صحابہ سے مونڈانا ثابت ہے مثلاً حضرت مولیٰ علی رضی اللہ تعالٰی عنہ بطورِ عادت مونڈایا کرتے تھے۔
(سنن أبي داود)

حضور اقدس صلَّی اللہ تعالٰی علیہ وسلَّم کے موئے مبارک کبھی نصف کان تک
(سنن أبي داود)

کبھی کان کی لوتک ہوتے
اور
جب بڑھ جاتے تو شانہ مبارک سے چھو جاتے
اور
حضور (صلَّی اللہ تعالٰی علیہ واٰلہٖ وسلَّم)بیچ سر میں مانگ نکالتے تھے.
(صحیح البخاري)

از
#احسان_اللہ کیانی