حروف استفہام ،فھم عربی کورس ،سبق نمبر 2



فھم عربی کورس
سبق نمبر
٢
حروف استفہام :
حرف استفہام دو ہیں
اَ ۔۔۔۔۔۔اور ۔۔۔۔۔۔ھَلْ
حروف استفہام کے ذریعہ کسی چیز کے بارے میں سوال کیا جاتا ہے ۔

اَ کا معنی :۔۔۔۔۔۔کیا

مثالیں :
اَ ھَذٰا مِفْتَاحٌ؟
کیا یہ چابی ہے ؟

اَ ھَذٰا بَیْتٌ؟
کیا یہ گھر ہے ؟

اَ عِنْدَکَ سَیَّارَۃٌ
یہ آپ کے پاس گاڑی ہے ؟

اَ اَنْتَ مِنْ البَاکِسْتَان؟
کیا آپ پاکستان سے ہیں؟

اَ فِیْ بَیْتِکَ حَدِیْقَۃٌ؟
کیا آپ کے گھر میں باغ ہے ؟

اَ کِتَابُ عَبَّاسٍ ھَذٰا؟
کیا یہ عباس کی کتاب ہے ؟

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ھل کا معنی : ۔۔۔۔۔۔ کیا

مثالیں :
ھَلْ ھُوَ غَنِیٌّ؟
کیا وہ مالدار ہے؟
is he rich..??

ھَلْ اَبِیْ ھنا؟
کیا میرے ابو یہاں ہیں ؟
is my father here..??

توجہ طلب:
ھل کے بعد جب ''اِلّاَ '' آجائے ،تو یہ نفی کا معنی دیتا ہے ۔
مثال :
(ہَل جَزَاء الْإِحْسَان إِلَّا الْإِحْسَان) (الرَّحْمَن: 60)
نہیں ہے احسان کی جزا مگر احسان

ترجمہ کا اصول :
''نفی ''اور ''الا ''ساتھ آجائیں ،تو اس کا ترجمہ مثبت کر سکتے ہیں
بامحاورہ ترجمہ :
احسان کا بدلہ احسان ہے
نیکی کا بدلہ نیکی ہے

طالب دعا:
احسان اللہ کیانی
١٧۔جون ۔٢١٠٧