اللہ تعالی کا اسم اعظم جس سے دعا قبول ھوتی ھے

اسم اعظم سے  دعا قبول ھوتی ھے:
نبی کریم علیہ السلام نے ایک آدمی کو دعا کرتے ہوئے سنا:
وہ یوں دعا کر رھا تھا.
"اللَّهُمَّ إِنِّي أَسْأَلُكَ بِأَنَّكَ أَنْتَ اللَّهُ،

لَا إِلَهَ إِلَّا أَنْتَ،

الْأَحَدُ، الصَّمَدُ،

الَّذِي لَمْ يَلِدْ، وَلَمْ يُولَدْ وَلَمْ يَكُنْ لَهُ كُفُوًا أَحَدٌ

اس کو سن کر نبی کریم علیہ السلام نے فرمایا:

"دَعَا اللَّهَ بِاسْمِهِ الْأَعْظَمِ الَّذِي إِذَا سُئِلَ بِهِ أَعْطَى، وَإِذَا دُعِيَ بِهِ أَجَابَ"

اس شخص نے اللہ کے اسم اعظم سے دعا کی ھے ،اسم اعظم کے ساتھ جب مانگا جائے ،تو اللہ عطا کرتا ھے .
جب اس کے ساتھ دعا مانگی جائے تو اللہ قبول فرماتا ھے.

"رواہ الترمذی و ابوداؤد و ابن ماجه والنسائي، وأحمد، وابن حبان، والحاكم"

یعنی یہ حدیث ان ان کتب میں ھے .

"سنن ترمذی ،سنن ابوداؤد ،سنن ابن ماجہ ،سنن نسائی،مسند احمد بن حنبل ،صحیح ابن حبان ،مستدرک "

#Allah #ism_e_Azam #islam #Duwa #Hadees