تازہ ترین
کام جاری ہے...
Tuesday, May 9, 2017

مشال خان کی دعا

May 09, 2017

صاحب پوچھنا یہ تھا کہ
                                        مشال خان گستاخ جو دعا مانگنے کو (madness) پاگل پن کہتا تھا جیسا کہ آپ اس کی آئی ڈی میں لگی تصویر جس میں یہ دعا مانگنے کے انداز میں ہاتھ اٹھائے اور منہ اوپر کیے بیٹھا ہے اور اس تصویر کے عنوان کو اس نے (madness) یعنی پاگل پن دیا ہے،
اس کو اسی کے کلاس فیلو یونیورسٹی میں (یاد رہے کہ یونیورسٹی مدرسہ نہیں) اللہ پاک اور اس کے رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی شان گستاخی کا مرتکب قرار دے کر جہنم واصل کردیتے ہیں اور سب اپنے اپنے بیانات بھی ریکارڈ کروا دیتے ہیں کہ یہ گستاخ تھا(ان بیانات کی کاپیاں پوسٹ کر چکا ہوں) چلو ملحدین سیکولرازم لبرل ازم کی تو سمجھ آتی ہے کہ وہ ایسے اپنا ہیرو قرار دیتے ہوئے اس کو ملحدیت کا شہید کا درجہ دیتے ہیں،
لیکن ایک صاحب  جو کہ اپنے آپ کو بہت بڑا مذہبی سکالر علامہ عالم فاضل قاری حافظ ہر طرح کے فتوے جاری کرنے والا مفتی اعظم اسلام سمجھتے ہیں(جب کہ میرا کہنا ہے کہ کتے کو بکرے کی کھال پہنانے سے وہ حلال نہیں ہو سکتا) اور اس  کے چیلے دن رات اسکی واہ واہ اور مالا چپتے نہیں تھکتے  اور یہ............صاحب کا چیلا کہتا ہے کہ مشال اللہ پاک سے دعا کرتا تھا (جب کہ اس نے صاف الفاظ میں اس کو پاگل پن کہا) اور یہ اس حساب سے مسلمان ہے اووو کاری رے کاری تیری کونسی کل سیدھی آپ یہ بتائیں کہ انڈین فلموں میں ہندو فنکار اداکاری کے دوران فلم میں  مسلمان کا رول ادا کرتے ہوئے کلمہ نماز اور قرآن پاک کی تلاوت کرتے ہیں کیا یہ ہندو اداکار بھی مسلمان ہوگے،؟
اگر نہیں تو یہ بتائیں صاحب کے
کیا یہ گامدیت الحادیت کی پہلی سیڑھی ہے
کیا یہ واقعی ہی میں ان ملحدین کے سہولت کار ہیں کیا یہ واقعی ہی میں ملحدین کی فیکٹری ہے.
کیا یہ واقعی ہی میں مسلمانوں کے درمیان کالی بھیڑ ہے
کیا یہ احادیث کا رد پیش کر کے ملحدوں کو اسلام پر بھونکنے کا موقع فراہم کرتا ہے،
کیا یہ پاگل تو نہیں ہو گیا کیا یہ شیطان کی طرح زیادہ علم کی وجہ سے غرور و تکبر کی وجہ سے اسلام سے خارج ہو گیا ہے،
                                    نوٹ
گدھے پر کتابیں لادنے سے وہ پی ایچ ڈی کی ڈگری ہولڈر نہیں بن سکتا ایسے ہی کتے کو بکرے کی کھال پہنانے سے وہ حلال نہیں ہو سکتا

0 تبصرے:

Post a Comment

اس کے متعلق آپکی کیا رائے ہے ۔۔؟؟
کمنٹ بوکس میں لکھ دیں ،تاکہ دیگر لوگ بھی اسے پڑھ سکیں

اردو میں تبصرہ پوسٹ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کر دیں۔


 
فوٹر کھولیں‌/بند کریں