لذتوں کا ختم کرنے والی

اس دنیا کی رنگینیوں اور لذتوں سے بچ کر رہنا کافی مشکل ہے
لیکن اگر ایک چیز کو کثرت سے یاد کیا جائے ،تو انسان کے لیے ان لذتوں سے بچنا بھت آسان ہو جاتا ہے.

وہ چیز کیا ہے ..؟؟
اسے جاننے کے لیے یہ حدیث شریف پڑھیے:

"خَرَجَ النَّبِيُّ - صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ - لِصَلَاةٍ فَرَأَى النَّاسَ كَأَنَّهُمْ يَكْتَشِرُونَ، قَالَ: " أَمَا إِنَّكُمْ لَوْ أَكْثَرْتُمْ ذِكْرَ هَادِمِ اللَّذَّاتِ لَشَغَلَكُمْ عَمَّا أَرَى الْمَوْتُ، فَأَكْثِرُوا ذِكْرَ هَاذِمِ اللَّذَّاتِ، الْمَوْتِ"

نبی کریم علیہ السلام ایک دن نماز(جنازہ) کے لیے باہر تشریف لائے ،
تو آپ نے لوگوں کو دیکھا ،وہ ہنس رہے ہیں
آپ علیہ السلام نے فرمایا:
اگر تم لذتوں کو ختم کرنے چیز کو کثرت سے یاد کرتے ،تو وہ تمھیں ضرور اس سے ھٹا دیتی،جس حال میں میں تمھیں دیکھ رھا ھوں (کہ تم ھنس رہے ھو اور اھل غفلت والی باتیں کر رہے ھو )
(یاد رکھو)
وہ لذتوں کو ختم کرنے والی چیز موت ہے .

"سنن ترمذی"
#islam #death  #Hadees #Tirmazi #sunan #Enjoy #fun #shugal