تازہ ترین
کام جاری ہے...
Tuesday, May 30, 2017

جن امور سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے

May 30, 2017

جن امور سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے:
حُقّہ، سگار، سگریٹ، چرٹ پینے سے روزہ جاتا رہتا ہے

کھانے پینے،جماع کرنے سے روزہ جاتا رہتا ہے، جبکہ روزہ دار ہونا یاد ہو

شکر وغیرہ ایسی چیزیں جو مونھ میں رکھنے سے گھل جاتی ہیں، مونھ میں رکھی اور تھوک نگل گیا روزہ جاتا رہا

کلی کر رہا تھا بلا قصد پانی حلق سے اُتر گیا، یا ناک میں پانی چڑھایا اور دماغ کو چڑھ گیا روزہ جاتا رہا،
مگر جبکہ روزہ ہونا بھول گیا ہو، تو نہ ٹوٹے گا

روزہ میں دانت اکھڑوایا اورخون نکل کر حلق سے نیچے اُترا، اگرچہ سوتے میں ایسا ہوا تو اس روزہ کی قضا واجب ہے۔

مبالغہ کے ساتھ استنجا کیا، یہاں تک کہ حقنہ رکھنے کی جگہ تک پانی پہنچ گیا، روزہ جاتا رہا

دماغ یا شکم کی جھلّی تک زخم ہے، اس میں دوا ڈالی اگر دماغ یا شکم تک پہنچ گئی روزہ جاتا رہا،
خواہ وہ دوا تر ہویا خشک
اور اگر معلوم نہ ہو کہ دماغ یا شکم تک پہنچی یا نہیں اور وہ دوا تر تھی، جب بھی جاتا رہا
اور خشک تھی تو نہیں

عورت کا بوسہ لیا، یا چُھوا ،یا مباشرت کی، یا گلے لگایا اوراِنزال ہوگیا ،تو روزہ جاتا رہا

کسی نے روزہ دار کی طرف کوئی چیز پھینکی، وہ اُس کے حلق میں چلی گئی روزہ جاتا رہا

سوتے میں پانی پی لیا یا کچھ کھا لیا یا مونھ کھولا تھا اور پانی کا قطرہ یا اولا حلق میں جا رہا روزہ جاتا رہا

مونھ میں رنگین ڈورا رکھا جس سے تھوک رنگین ہوگیا پھر تھوک نگل لیا روزہ جاتا رہا

آنسو مونھ میں چلا گیا اور نگل لیا، اگر قطرہ دو قطرہ ہے تو روزہ نہ گیا اور زیادہ تھا کہ اس کی نمکینی پورے مونھ میں محسوس ہوئی تو جاتا رہا۔ پسینہ کا بھی یہی حکم ہے

ماخوذ از
بہار شریعت
#روزہ #افطار #فتوی #روزے_کے_مسائل
#roza #ramzan #iftar

0 تبصرے:

Post a Comment

اردو میں تبصرہ پوسٹ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کر دیں۔


Translate in your Language

LinkWithin

Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
 
فوٹر کھولیں‌/بند کریں